تعبیرخواب

پردہ

حضرت ابن سیرین رحمتہ اللہ علیہ نے فرمایا ہے کہ جو کوئی شخص خواب میں پردہ دیکھے کہ اس کے دروازے پر لٹکا ہوا ہے ۔ اگر تنگ ہو اور سطبر(سطبر ہو:خوب موٹا ہو)ہو تو غم و اندوہ کی دلیل ہے اور ترس (ترس وبیم سے :خوف اور ڈر ہے)وبیم ہے اور آخر کار امن ہے ۔ اور اگر خواب میں دیکھے کہ سرائے کے دروازے یا مسجد کے دروازے پر یا بازار میں پردہ پڑا ہوا ہے تو غم و اندوہ اور نہایت خطرے کی دلیل ہے ۔ حضرت ابراہیم کرمانی رحمتہ اللہ علیہ نے فرمایا ہے کہ اگر کوئی شخص خواب میں دیکھے کہ پردہ ضائع ہوا تو صاحب (صاحب خواب:خواب دیکھنے والا آدمی ) خواب غم و اندوہ سے خوشی پائے گا اور ترس وبیم سے امن میں ہو گا۔
اور اگر پردہ دیکھے اورغیر معروف ہو تو نہایت سخت غم و اندوہ ہو گا اور اگر وہ معروف ہے تو زیادہ آسان ہو گا۔
حضرت جابر مغربی رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے کہ نیا پردہ دیکھنا بادشاہ کے لئے اچھا ہے اور رعیت کے لئے برا ہے اور پرانا پردہ دیکھنا کسی حال میں بھی اچھا نہیں ہے۔