تعبیرخواب

جوارب

حضرت ابن سیرین رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے کہ خواب میں جوارب ایک خادم عورتوں کے شمار میں سے ہے ۔ اگر خواب میں دیکھے کہ نئی جوارب ریشم کی یا دھاگوں کی پہنی ہے ۔ تو دلیل ہے کہ اس کا خادم اصیل ہو گا اور اس سے فائدہ اٹھائے گا ۔
اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب پشمینہ کی یانقش دار ہے تو دلیل ہے کہ خوبصورت کنیز خریدے گا یا صاحب جمال عورت کرے گا ۔
اور اگر دیکھے کہ اس کے پاس زرد رنگ کی جوارب ہے تو دلیل ہے کہ اس کا خادم بیمار سا ظاہر ہو گا ۔ اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب سرخ ہے تو دلیل ہے کہ اس کا خادم بے شرم اور شوخ ہو گا ۔
اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب سیاہ ہے ۔ اگر صاحب نواب مصلح ہے تو تاویل نیک ہے اور اگر مفسد ہے تو تاویل بد ہے ۔ اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب پرانی اور میلی ہے ۔ تو دلیل ہے کہ اس کے خادم پر تہمت لگے گی ۔ اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب ضائع ہو گئی ہے یا جل گئی ہے ۔ تو یہ خادم کی موت پر دلیل ہے ۔
اور بعض اہل تعبیر نے بیان کیا ہے کہ خواب میں جوارب مال اور مراد ہے ۔ اور اگر جوارب بو دیتی ہے ۔ تو دلیل ہے کہ مال کی زکوۃ دے گا ۔ اور اگر جوارب کی بو ناخوش ہے تو دلیل ہے کہ مال کی زکوۃ نہ دے گا ۔ اور لوگوں کی زبان اس پر دراز ہو گی ۔
حضرت ابراہیم کرمانی رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے ۔ اگر دیکھے کہ اس کی جوارب چمڑ ے کی ہے ۔ اگر اونٹ کے چمڑے کی ہے تو دلیل ہے کہ اس کا خادم باہمت اور اصل کا بزرگ ہے ۔ اور اگر بکری کے چمڑے کی ہے ۔تو دلیل ہے کہ اس کا خادم عام لوگوں میں سے ہے ۔ اور اگر گھوڑے کی چمڑے کی ہے تو دلیل ہے کہ اس کا خادم بزرگ اور سپاہیوں کی نسل سے ہے ۔ اور اگر اس کی جوارب جنگلی جانو ر کے چمڑے کی ہے تو دلیل ہے کہ اس کا خادم جنگلی شخص ہے ۔
حضرت جابر مغربی رحمتہ اللہ علیہ نے فرمایا ہے کہ اگر دیکھے کہ اس کے پاوں میں جوارب ہے تو دلیل ہے کہ مال کو نگاہ رکھے گا ۔ اور اگر دیکھے کہ اس کے پاؤں میں سفید اور پاکیزہ جوارب ہے ۔ تو دلیل ہے کہ اس نے اپنے مال کی زکوۃ دی ہے ۔
حضرت جعفر صادق علیہ السلام نے فرمایا ہے کہ پالیمال جوارب مرد اور زکوۃ کو نگہدار ہے ۔ اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب سے خوشبو آتی ہے ۔ تو دلیل ہے کہ موت اور زندگی میں نیک نام ہو گا ۔اور اگر بدبو آتی ہے تو لوگ اس کی ملامت اور نفرین کریں گے ۔ اور اگر دیکھے کہ اس کی جوارب ضائع ہو گئی ہے تو دلیل ہے کہ زکوۃ نہ دے گا اور اس کا مال ضائع ہو گا