تعبیرخواب

داغ کردن(داغ کرنا)

حضرت ابن سیرین رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے کہ خواب میں داغ کرنا مال اور خزانہ ہے ۔ اور اگر دیکھے کہ لوگوں نے اس کو داغ لگایا ہے ۔دلیل ہے کہ اسی قدر مال راہ خدا میں خرچ کرے گا اور آخرت میں عذاب سے نجات پائے گا ۔
حضر ت ابراہیم کرمانی ؒ نے فرمایا ہے کہ اگر دیکھے کہ داغ کے نشان سے خون اور پیپ نکلی ہے ۔ دلیل ہے کہ بادشاہ کے در پر مقیم ہو گا ۔ اور اگر خون اور پیپ نہیں ہے ۔ دلیل ہے کہ بادشاہ سے کسی طرح کی منفعت نہ پائے گا ۔
حضرت دا نیال علیہ السلام نے فرمایا ہے ۔ اگر دیکھے کہ اسے کسی کے جسم پر داغ کیا ہے ۔ اس کی تاویل بری بات ہے ۔ یا اس کو تہمت لگائیں گے ۔ اور اگر دیکھے کہ کسی بیماری سے اس کی پشت پر داغ لگایا ہے ۔ تو یہ دین اور دنیا کی صلاح کی دلیل ہے ۔ اور بعض اہل تعبیر نے بیان کیا ہے کہ داغ لگانا بادشاہ کے کام میں بنیا دہے ۔
حضرت جعفر صادق علیہ السلام نے فرمایا ہے کہ خواب میں داغ لگانا ، زکوۃ کو روکنا اور بادشاہ کے ساتھ مشغولی ہے ۔ فرمان حق تعالیٰ ہے ۔ یوم یحمی علیھا فی نار جھنم فتکوی بھا جباھم و ظھور ھم (جس دن آگ دھکا دینگنے اس پر دوزخ کی پھر داغیں گے ان کے ماتھے اس سے اور کروٹیں اور پیٹھیں )