تعبیرخواب

شادرواں(توشک)

حضرت ابن سیرین رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے ۔اگر خواب میں دیکھے کہ توشک فراخ بچھائی سے اور جانتا ہے کہ اس کی ملک ہے ۔دلیل ہے کہ اس کی فراخی کے مطابق عیش او ر عمر دراز پائے گا ۔
اور اگر دیکھے کہ دوستوں سے ساتھ اپنے شہر میں یا اوپری جگہ میں تو شک پر بیٹھا ہے ۔تو مال و نعمت اور روزی اور درازی عمر پر دلیل ہے ۔ اور اگر دیکھے کہ بیگانی جگہ میں اس کے لئے کسی نے تو شک بچھائی ہے تو یہ معلوم نہیں کہ کس کی ملکیت ہے دلیل ہے کہ اس کے احوال متغیر ہوں گے اور سفر میں مرے گا ۔
اور اگر چھوٹی تو شک خواب میں دیکھے تو تھوڑی روزی اور چھوٹی عمر پر دلیل ہے ۔ اور اگر دیکھے کہ تو شک لپیٹ کر اپنے اوپر اٹھائی ہے ۔ دلیل ہے کہ اپنی جگہ سے بیگانی جگہ پر جائے گا ۔
اور اگر دیکھے کہ تو شک پر کسی مرد کی تصویر نقش کی ہوئی ہے اور اس مرد کو پہنچانتا ہے اور اس کی باتیں کرتا ہے ۔ دلیل ہے کہ اس کی جھوٹی تعریف کرے گا ۔ اور اگر دیکھے کہ توشک بیچی ہے یا کسی کو دی ہے تو اس کی تاویل بد ہے ۔
حضرت دانیال علیہ السلام نے فرمایا ہے ۔ اگر دیکھے کہ تو شک بچھائی ہوئی ہے ۔ تودلیل ہے کہ اس پر روزی فراخ ہو گی اور اگر اس کے خلاف دیکھے ۔ دلیل ہے کہ اس کی روزی تنگ ہو گی ۔ اور اگر دیکھے کہ فراخ تو شک بچھی ہوئی تھی اور اس نے اپنی ہاتھ سے لپیٹ کر گھر کے گوشے میں رکھی ہے ۔ دلیل ہے کہ اپنی دولت اور اقبال کو برباد کرے گا ۔
حضرت جابر مغربی رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے ۔ اگر دیکھے کہ تو شک زرد ہے تو بیماری پر دلیل ہے اور اگر توشک سفید دیکھے تو نعمت اور حلال روزی کی فراخی پر دلیل ہے ۔
حضرت اسماعیل اشعت رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے ۔ اگر دیکھے کہ نا معلوم توشک نا معلوم جگہ میں ڈالی ہوئی ہے ۔ دلیل ہے کہ جو کچھ اس کے پاس ہے جاتا رہے گا ۔ اور اگر دیکھے کہ معلوم توشک کسی کے گھر میں بچھائی ہوئی ہے ۔ دلیل ہے کہ صاحب خانہ کو نعمت اور روزی حاصل ہو گی ۔
اور اگر دیکھے کہ تو شک نا معلوم گھر میں ڈالی ہوئی ہے اور وہ اس پر بیٹھا ہے ۔ دلیل ہے کہ وہ سفر کو جائے گا اور اس میں مال اور نعمت حاصل کرے گا ۔
حضرت جعفر صادق علیہ السلام نے فرمایا ہے خواب میں توشک کا دیکھنا چار وجہ پر ہے ۔ (۱)روزی مال(۲)درازی عمر(۳)منفعت(۴)معیشت۔