لذیذہ کھانے اور پکوان

بھنا ہوا قیمہ

سامان
قیمہ جو کافی موٹا بنوایا گیا ہو آدھ سی گھی تین چھٹانک لال مرچ دھنیہ پسا ہوا گرم مسالہ حسب ضرورت و ذائقہ۔پیاز دو ڈلیاں۔لہسن چند جوے۔ہرے دھنیے کی آدھی پوتھی۔ادرک کی ایک چھوٹی ڈلی۔
ترکیب
سب مسالے پانی میں پیس کر تیار کر لئے جائیں پیاز کے باریک لچھے کاٹ لئے جائیں اب قیمے میں تھوڑا پسا ہوا نمک اور پسی ہوئی مرچ بہت ہی قلیل مقدار میں ملائیں پھر پیاز کی آدھی مقدار گھی میں ڈال کر پتیلی چولہے پر چڑھائیں اور گھی کو کڑ کڑا کر پیاز لال کریں۔یہ پیاز پتیلی میں نے نکال کر الگ کرلیں اور پتیلی میں مسالہ ڈال کر پانی کے بغیر بھوننا شروع کریں جب کبھی مسالہ پتیلی میں لگنے لگے پانی کا ہلکا سا چھینٹا دے دیں تا کہ مسالہ جلنے نہ پائے یار رکھیے اگر مسالہ بھوننے کے دوران جل گیا تو سالن میں کڑواہٹ آجائے گی۔تقریباً دس منٹ تک مسالہ اسی طرح بھونئے جب یہ گھی چھوڑنے لگے اور گھی میں مرچوں کی لالی نظر آنے لگے توتھوڑا سا پانی ڈال کر قیمے کو گلنے دیں۔اگر اس کے باوجود قیمہ اور مسالہ پتیلی میں لگنے لگے تو تھوڑا پانی اور دے دیں لین اس کی مقدار زیادہ نہیں ہونی چاہئے۔بھوننے والے قیمہ کو زیادہ تر بھوننے کے عمل سے ہی گلایا جاتا ہے۔دوسرا پانی خشک ہوجانے کے بعد تھوڑا قیمہ کفگیر سے نکال کر دیکھئے کہ آیا گل گیا ہے اگر گل گیا ہو تو دوبارہ بھوننا شروع کر دیجئے۔لیکن اگر نہ گلا ہو تو تیسرا پانی دیجئے مگر اس کی مقدار بھی کم سے کم ہونی چاہئے قیمے کو دوسری مرتبہ بھوننے کا عمل دس پندرہ منٹ تک جاری رکھئے اور جب کبھی لگنے لگے پانی کا ہلکا سا چھینٹا دے دیجئے اس وقفے کے بعد قیمہ گھی چھوڑنے لگے لگا ۔آپ پتیلی چولہے سے اتار کر اس کا نمک مرچ چھکے اگر ٹھیک ہو تو گویا سالن تیار ہوگیا اگر کچھ کمی ہو تو مزید نمک مرچ مل کر پتیلی ایک بار پھر چولہے پر چڑھانے کے بعد تھوڑا پانی ڈال کر چند منٹ تک سالن کو مزید پکنے دیجئے پھر اتار لیجئے اس پر ہرا دھنیہ اور باریک کٹی ہوئی ادرک ضرور چھڑکئے ان سے سالن کے ذائقے میں اضافہ ہوتا ہے بھنے ہوئے قیمے کو تر بتر پراٹھوں کے ساتھ کھائیے۔