تعبیرخواب

استغفار ( بخشش چاہنا)

استغفا ر کے لفظی معنی ہیں ، گنا ہوں کی معا فی مانگنا ۔استغفر اللہ کہنا۔ حق تعالیٰ سے بخشش طلب کر نا ہے ۔
حضرت ابن سیر ین رحمتہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے کہ اگرکوئی شخص خواب میں استغفا ر کرے تودلیل ہے کہ حق تعالیٰ اس کو مال اور فر زند عطاکرے گا۔فرمان حق تعالیٰ ہے۔ واستغفر و ا ربکم انہ کان غفار یرسل السماء علیکم مد راراویمہکم بامو ال و بنین(اللہ تعالیٰ سے بخشش مانگو، کیو نکہ وہ بخشنے والا ہے ۔ تم پر مو سلادھار بارش کر ے گااور مال و اولاد سے مد د کر ے گا۔ 
حضر ت جعفر صا دق رضی اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے کہ اگر کوئی شحض خوا ب میں استغفار کرنا چارو جہ پر ہے۔ اول ،مال ۔دوم، فرزند ۔ سوم ، حق تعالیٰ سے بخشش ۔ چہا رم ، گناہوں سے توبہ۔
اسطر لاب:(علم نجوم کا وہ آلہ جس سے آفتا ب اور ستاروں کی بلند ی معلو م کی جاتی تھی ):
حضر ت کرمانی رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے کہ خواب میں اسطر لاب کی تاویل بادشاہ کے مصاحب اور سر دار ہیں اگر کوئی شخص خواب میں دیکھے کہ اس کے پاس اسطر لاب ہے یا خرید ا ہے یا اس کو کسی نے دیا ہے تو دلیل ہے کہ سلطانی مصاحبوں میں ہو گااور قوم کاسردار ہوگا۔ اوراگردیکھے کہ اسطرلاب گم ہو گیا ہے یا ٹو ٹ گیا ہے تو دلیل ہے کہ اس کے جاہ اور مرتبے میں نقصان ہوگا۔ 
حضر ت جابر مغر بی رحمتہ اللہ علیہ نے فرمایا ہے۔اگر کو ئی شخص خو اب میں دیکھے کہ اسطر لاب سے آفتا ب کو دیکھتا ہے تو دلیل ہے کہ بادشاہ کے کام یا اس کے سر داروں کے کام میں مشغو ل ہوگا اور ان سے خیر و منفعت پائے گا اور بعض اہل تعبیر بیا ن کرتے ہیں کہ خو اب میں اسطر لاب ایسا مرد ہو تاہے کہ جس کو ثبا ت اور استقلا ل نہیں ہوتاہے اور پائید ا رکام پر نہیں ہوتاہے۔