تعبیرخواب

صاعقہ (بجلی)

حضرت ابن سیرین رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے ۔ کہ صاعقہ آگ ہے جو بادل سے نکلتی ہے ۔ اگر میں دیکھے کہ بادل سے بجلی گری ہے ۔ دلیل ہے کہ اسی قدر حق تعالیٰ کا عذاب اس جگہ والوں کو ہو گا۔ فرمان حق تعالیٰ ہے ۔ ویر سل علیھام حسبانا من السماء فتصبح صعید ازلقا(اور ان پر آسمان سے عذاب بھیجے پھر رہ جائے وہ ایک چٹیل میدان ہو کر )اس ملک والوں کو توبہ کرنی چاہے تاکہ ان سے عذاب دور ہو جائے ۔
حضرت ابراہیم کرمانی رحمتہ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے ۔ کہ اگر دیکھے کہ ہوا سے آگ بارش کی طرح برسی ہے ۔ دلیل ہے کہ ملک میں بادشاہ کی طرف سے بلا اور خونریزی ہو گی ل۔ اگر دیکھے کہ بجلی گری اور اس کو جلادیا ۔ دلیل ہے کہ صاحب بادشاہ کے عذاب سے ہلاک ہو گا ۔