تعبیرخواب

کشت زار (کھیت)

حضرت ابن سیرین رحمۃ اﷲ علیہ نے فرمایا ہے کہ خواب میں بوئی ہوئی کھیتی کا اگنا جب کہ معلوم ہو اور کسی معلوم جگہ میں اپنے موسم پر دیکھے تو لوگوں کے فرزندوں پر دلیل ہے۔ اور اگر دیکھے کہ کھیت کو کاٹا ہے۔ دلیل ہے کہ لوگ لڑای میں مارے جائیں گے۔ حضرت دانیال علیہ السلام ے فرمایا ہے ۔ اگر دیکھے کہ معلوم کھیت میں ہے۔ دلیل ہے کہ دین و دنیا کی بہتری کا عمل کرے گا اور دیکھا کہ کھیت بویا اور کاٹا اور غلہ کو نکالا دلیل ہے کہ اس کی امید پوری ہو گی۔ اور اگر دیکھے کہ کھیت میں جا رہا ہے۔ دلیل ہے کہ غازیوں کے ساتھ ہو کر جہاد کرے گا۔ حضرت جابر مغربیؓ نے فرمایا ہے کہ خواب میں کھیت کا کاٹنا لڑائی اور جھگڑے پر دلیل ہے۔ اور بعض اہل تعبیر نے بیان کیا ہے ۔ اگر دیکھے کہ کھیت میں گیا ہے اور لوگوں نے سبز ہی کاٹا ہے۔ دلیل ہے کہ مصارف میں جائے گا اگر دیکھے کہ کھیت میں آگ لگی ہے اور سب جلا دیا ہے۔ دلیل ہے کہ اس ملک میں قحط پڑے گا۔ اور اگر دیکھے کہ اپنے کھیت کو پانی دیا ہ۔ دلیل ہے کہ اس کے ہاتھ سے ایسا کام ہو گا کہ جس سے دنیا اور آخرت میں منفعت ہو گی۔ اور اگر دیکھے کہ آگ آئی ہے اور اس نے کھیت کو جلا دیا ہے۔ دلیل ہے کہ اس کا بادشاہ سے نقصان ہو گا۔ اور اگر دیکھے کہ کھیت میں ایک بڑی نہر آئی ہے۔ دلیل ہے کہ ا س ملک میں قحط اور تنگی ہو گی۔ اور اگر دیکھے کہ گیہوں کے خوشوں سے زمین پر دانے گرے ہیں۔ دلیل ہے کہ اسی قدر کھیت والے کا نقصان ہو گا۔ اور اگر نہ جانے کہ وہ جگہ کسی کی ملکیت ہے دلیل ہے کہ اس کا نقصان صاحب خواب ہو گا۔ فرمان حق تعالیٰ ہے۔ نساو کم حرث لکم فاتو حرثکم انی شتم (تمہاری عورتیں تمہاری کھیت ہیں اپنے کھیت میں جیسے چاہو آؤ۔ اور اگر کھیت کو موسم میں سبز دیکھے۔ دلیل ہے کہ اس ملک میں نعمت فراخ ہو گی اور اگر زمین اس کی ملکیت ہے دلیل ہے کہ اس کی مراد پوری ہو گی۔ اور اگر وقت پر کھیت کو کاٹے اور خوشے گھر کو لے جائے تو مصیبت پر دلیل ہے۔ اور اگر دیکھے کہ کھیت میں دوستوں کے ساتھ گیا ہے۔ دلیل ہے کہ جہاد کو جائے گا۔ حضرت جعفر صادق علیہ السلام نے فرمایا ہے کہ خواب میں پکے ہوئے کھیت کا کاٹنا اس کے موسم پر بہتری اور منفعت پر دلیل ہے اور اگر کچا اور سبز ہے تو بیماری پر دلیل ہے۔ حضرت اسماعیل اشعث رحمۃ اﷲ علیہ نے فرمایا ہے کہ وقت پر کھیت کو کاٹنادلیل ہے کہ امر حق بجالائے گا۔ اور درویشوں کے حق میں خیرات کی توفیق پر دلیل ہے۔ فرمان حق تعالیٰ ہے۔ واتو حقہ یوم حصالہ (کاٹنے کے دن ا س کا حق اداکرو) اگر یہ چیز جو دیکھی ہے اور کاٹی ہے۔ دلیل ہے کہ اس کی عاقبت محمود ہو گی۔