تعبیرخواب

لرزیدن (کانپنا)

حضرت ابن سیرین رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ نے فرمایا ہے۔ اگر دیکھے کہ اس کی گردن کانپتی ہے۔ دلیل ہے کہ امانت داری میں ضعیف ہو گا۔ اگر دیکھے کہ اس کا سر کانپ گیا ہے۔ دلیل ہے کہ اس کو حاکم سے نقصان پہنچے گا۔ اور اگر دیکھے کہ اس کی گردن کانپتی ہے دلیل ہے کہ زینت اور آراستگی نہ رکھے گا۔ اور اگر دیکھے کہ اس کے ہاتھ کانپتے ہیں۔دلیل ہے کہ وہ نیک معیشت والا ہووے اور اگر دیکھے کہ سینہ اس کا کانپ رہا تھا تو دلیل یہ ہے کہ وہ کوئی ایسی بات سنے کہ جس سے اندوہ گیں و غمناک ہووئے۔اور اگر دیکھے کہ اس کا پیٹ کانپ رہا تھا تو دلیل یہ ہو کہ جس شخص کی طرف سے اس کو قوت حاصل ہو اور وہ اس کی پناہ ہو اس کی طرف سے کوئی رنج و تکلیف اس کو پہنچے۔ اور اگر دیکھے کہ پاؤں اس کا کانپ رہا تھا تو دلیل یہ ہو کہ وہ بسبب اپنی کسی مراد کے جس کے وہ درپی ہو کوئی رنج و سختی دیکھے۔ دانیال علیہ السلام فرماتے ہیں کہ کانپنا جسم کے اعضاء کا خواب میں کوئی خوف و ہراس ہوتا ہے۔