وضع حمل کے عوارض

وضع حمل کے وقت پیشاب بند ہو جائے تونا گزیر اور جان بچانے والی دوائیں

کاسٹیکم                  1000-200                               Causticum

کاسٹیکم کے بعد مفید دوا :

پریرابر یوا                  Q                   Pareira Brava

اگر وضع حمل کے وقت عورتوں کے گردوں پر اثر ہو۔دباؤ یا سوزش کی وجہ سے پیشاب بند ہو جائے تو بسا اوقات کاسٹیکم ناگزیر ہو جاتی ہے بلکہ ایسی حالت میں یہ جان بچانے والی دوا بن جاتی ہے۔
بعض عورتوں کو جنہیں وضع حمل کو بعد ۲۴ گھنٹے تک پیشاب نہیں آیا جب کاسٹیکم دی گئی تو شروع میں خون والا پیشاب آیا جس کا مطلب یہ ہے کہ گردوں میں سوزش تھی،فالجی حالت نہیں تھی۔پھر پیشاب کے ساتھ خون کم ہونے لگا اور کھل کر پیشاب آنا شروع ہوگیا۔ بعد میں انہیں پریرابریوا Pareira Brava Q کا کورس دیا گیا۔کیونکہ گردوں کو دھونے اور پیشاب کو زیادہ کرنے میں عمومی طور پر اچھا اثر کرتی ہے۔